Historical archive

The Minister of Education and Integration's introduction at a press conference on corona and new economic measures

Historical archive

Published under: Solberg's Government

Publisher Ministry of Education and Research

Throughout this pandemic, we have endeavoured to shield children and young people as much as possible from the most invasive measures. We have done this because we know that living under social restrictions, in quarantine and isolation, is hard, and especially hard when it is your childhood, your youth or your student days that suffer.

Even though we have all been affected by the infection control measures put in place to keep the pandemic at bay, many young people feel they have missed out on a lot over the past year. And you have.

That is why we propose funding for a student package of measures and a deal for young people.

These are demanding times for students. Not only have they had a lot of digital teaching and missed contact with friends, fellow students and family. Many have also lost part-time jobs as a result of infection control measures.

The package of measures aimed at students includes compensation for loss of income in the form of an additional loan of which 40% can be converted to a grant.

We will spend NOK 150 million on creating new jobs for students at tertiary vocational colleges, universities and university colleges. This money will be spent on paying students to engage in academic and social follow-up of other students.

In combination with other measures aimed at improving the social support available to students, we are now delivering a package that will make a positive difference to students’ everyday lives - even in the current situation.

We invest a great deal in young people. In order to counteract exclusion and long-term unemployment, we will implement a special deal for young people in order to tailor educational measures, improved follow-up through NAV, more summer jobs and extended possibilities to defer repayment of student loans.

Among other things, we will upscale flexible study programmes that are particularly suitable for graduates and young people with little work experience, as well as people who have been laid off or are unemployed.

We propose measures for apprentices and trainees that are otherwise at risk of being laid off or losing their apprenticeship.

And we are investing in summer schools. With NOK 500 million in funding, we aim to help municipalities to provide more young people with an arena where they can take part in academic, social and cultural activities during the summer holidays this year.

This can also provide new opportunities for pupils who need to make up for progress lost as a consequence of infection control measures in schools.

The municipalities can collaborate with sports clubs, municipal culture schools, clubs and associations, school camps and other parties to provide summer school activities to primary and lower secondary school pupils.

The Government also proposes NOK 323 million in funding for targeted integration measures. The money will go to Norwegian language tuition, introduction programme and information measures aimed at groups of immigrants.

We have talked a lot about billions and financial measures that are important to a great number of people – not least to students and pupils all over Norway.

Things will get better, but as the first month of this year has demonstrated, we will also experience setbacks. The Government will continue to implement financial measures that make a difference until we are through the crisis.

But more and more people are realising that this is not simply a matter of money. We miss each other, and we miss giving people a hug. Each and every one of us must continue to care about each other. Send a text message, call people on the phone or do something else for the people you care about.

Translations

وبا کے تمام عرصے میں ہم نے بچوں اور نوجوانوں کو زندگی میں نہایت مداخلت کرنے والے اقدامات سے بچانے کی کوشش کی ہے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ ہم جانتے ہیں سماجی پابندیوں کے ساتھ، کوارنٹین اور آئسولیشن میں، زندگی کتنی مشکل ہوتی ہے۔ خاص طور پر جب یہ آپکے بچپن، نوعمری اور طالبعلمی کا زمانہ ہو۔

اگرچہ وبا کو قابو میں رکھنے کے لیے انفیکشن سے بچاؤ کے اقدامات نے ہم سب کو متاثر کیا ہے، ہمارے بہت سے نوجوانوں کا تجربہ یہ رہا ہے کہ وہ پچھلے سال کے بیشتر حصے سے محروم رہے ہیں۔ اور یہ بات درست ہے۔

 

اس لیے ہم ایک سٹوڈنٹ پیکیج اور ایک Ungdomsløft (نوجوانوں کا ترقیاتی پروگرام) تجویز کر رہے ہیں۔

طالبعلموں کے لیے یہ زمانہ بہت مشکل ہے۔ طالبعلموں کو صرف بہت سی ڈیجیٹل تعلیم پر گزارا نہیں کرنا پڑا اور دوستوں، ساتھی طالبعلموں اور رشتہ داروں سے تعلق میں کمی برداشت کرنی پڑی بلکہ انفیکشن سے بچاؤ کے اقدامات کی وجہ سے وہ سائیڈ جابز سے بھی محروم ہوئے۔

سٹوڈنٹ پیکیج میں ہم آمدن سے محرومی کے لیے بھی معاوضہ دے رہے ہیں، یہ ایک اضافی قرض کی صورت میں ہو گا جس میں 40 فیصد بطور تعلیمی وظیفے (سٹائپینڈ) کے ہے۔

ہم پیشہ ورانہ تعلیم کے اداروں، یونیورسٹی کالجوں اور یونیورسٹیوں میں طالبعلموں کے لیے نئی ملازمتیں پیدا کرنے پر 150 ملین کرونر خرچ کریں گے۔ یہ رقم طالبعلموں کو دوسرے طالبعلموں کے لیے تعلیمی اور سماجی مدد مہیا کرنے کی تنخواہ کے طور پر ملے گی۔

طالبعلموں کے لیے سماجی مدد بہتر کرنے والے اقدامات کے ساتھ ساتھ ہم یہاں ایک ایسا پیکیج مہیا کر رہے ہیں جو طالبعلموں کی روزمرہ زندگی کو بہتر بنائے گا – باوجود ہمارے موجودہ حالات کے۔

ہم نوجوانوں کے لیے بہت کام کر رہے ہیں۔ نوجوانوں کے معاشرے سے کٹ جانے اور طویل المدت بیروزگاری سے بچاؤ کے لیے ہم ایک ترقیاتی پروگرام لا رہے ہیں جو تعلیم، NAV کے ذریعے بہتر خبرگیری، زیادہ سمر جابز اور تعلیمی قرضے کی واپسی میں مہلت بڑھانے جیسے اقدامات کے لیے بالخصوص تشکیل دیا گیا ہے۔

ہم لچکدار تعلیمی پیشکشوں میں بھی اضافہ کر رہے ہیں جو بالخصوص نئے ڈگری یافتہ اور نوجوان لوگوں کے لیے ہیں جنہیں ملازمت کا زیادہ تجربہ نہیں ہے اور بیروزگاروں اور رخصت پر بھیجے جانے والوں کے لیے بھی ہیں۔

ہم ان اپرنٹسوں (زیر تربیت کاریگروں) اور ٹریننگ کینڈیڈیٹس کے لیے اقدامات تجویز کر رہے ہیں جنہیں رخصت پر بھیج دیا گیا ہے یا رخصت پر بھیجے جانے یا تربیتی ملازمت چھٹ جانے کا خطرہ ہے۔

ہم سمر سکول پر بھی کام کر رہے ہیں۔ 500 ملین کرونر استعمال کرتے ہوئے ہمارا ہدف یہ ہے کہ بلدیات زیادہ نوجوانوں کو ایسا انتظام پیش کر سکیں جہاں وہ اس سال گرمیوں کی چھٹیوں میں تعلیمی، سماجی اور ثقافتی سرگرمیوں میں شریک ہو سکیں۔

اس سے سکول کے ان طالبعلموں کو بھی نئے مواقع مل سکتے ہیں جنہیں سکولوں میں انفیکشن سے بچاؤ کے اقدامات کے نتیجے میں رہ جانے والی تعلیمی کسر کو پورا کرنے کی ضرورت ہے۔

بلدیات سپورٹس کلبوں، کلچرل سکولوں، تنظیموں، کیمپ سکولوں وغیرہ کے ساتھ باہمی تعاون استوار کر کے پرائمری اور ہائی سکول کے طالبعلموں کو سمر سکول کی پیشکش دے سکتی ہیں۔

حکومت انٹیگریشن کے لیے بھی باقاعدہ ہدف کے تحت اقدامات کے لیے 323 ملین کرونر تجویز کر رہی ہے۔ یہ رقم تارک وطن گروہوں کے لیے نارویجن زبان کی تعلیم، انٹروڈکشن پروگرام اور معلومات دینے کے اقدامات پر بھی خرچ ہو گی۔

اب ہم نے بلینز اور بہت سے لوگوں کے لیے اہم معاشی اقدامات کا کافی ذکر کر لیا ہے – جو پورے ملک میں یونیورسٹیوں، کالجوں اور سکولوں کے طالبعلموں کے لیے بھی اہم ہیں۔

حالات بہتر ہو جائیں گے لیکن نئے سال کے پہلے مہینے نے ہمیں یہ بھی دکھایا ہے کہ مسائل ہمیں پیچھے بھی دھکیل دیتے ہیں۔ حکومت تب تک اچھے اثرات والے معاشی اقدامات جاری رکھے گی جب تک ہم اس زمانے سے گزر نہ جائیں۔

لیکن لوگوں کی بڑھتی ہوئی تعداد محسوس کر رہی ہے کہ بات صرف پیسوں کی نہیں۔ بات یہ بھی ہے کہ ہم ایک دوسرے کی کمی محسوس کر رہے ہیں اور گلے ملنا چاہتے ہیں۔ ہم میں سے ہر ایک کو آئندہ بھی ایک دوسرے کا خیال رکھنا ہے۔ اپنے پیاروں کو میسیج بھیجیں، فون کریں یا ان کے لیے کچھ اور کریں۔

Intii uu cudurkaan faafi og jiray oo dhan waxaan isku dayaynay in aan carruurta iyo dhallinyarada ka badbaadinno tillaabooyinka kuwooda ugu adag. Maxaa yeelay way adag tahay in lagu jiro xaddidaad bulsho, karantiil iyo gooni isu soocid. Waxay weliba kuwaasi sii adag yihiin marka sidaas lagugu sameeyo adigoo ah carruur, dhallinyaro ama arday.

Tillaabooyinkaan lagu xakamaynayo cudurkan faafi og in kasta oo ay kulligeen aad noo dhibeen, ayaa waxaa jirta in ay dhallinteenna qaar badan dareemayaan in ay wax badan lumiyeen sanadkii u danbeeyay. Waadna lumiseen ba.

Sidaas darteed ayaan waxaan soo jeedinaynaa caawinta ardayda iyo in dhallinyarada wax loo qabto [Ungdomsløft].

Waxaa lagu jiraa wakhti ay adag tahay in arday la ahaado. Waxaa ardayda khasab ku noqotay in ay inta badan hab dhigitaal ah wax ku bartaan, in uu yaraaday xiriirkii saaxiibbada, ardayda kale iyo kii qoyska. Waxaa intaas u dheer in ay waayeen shaqadii ay waxbarashada ku garab wadeen, taas oo ay keeneen tillaabooyinka looga hortagayo faafidda cudurka.

Caawinta ardayda waxaan tusaale ahaan ku bixinaynaa caawin ardayga loogu beddelayo dakhligii uu lumiyay, caawintaas oo ah amaah dheeri ah, amaahdaas oo boqolkiiba 40 noqonaysa deeq.

150 milyan oo karoon ayaan ku bixin doonnaa in ay dugsiyada farsamada, machadyada iyo jaamacaduhu shaqooyin cusub ardayda ugu abuuraan. Ardayda ayaa lacagtaan mushaar looga dhigayaa si ay ardayda kale ula socdaan xag maaddo iyo xag bulsho labadaba.

Caawinta wax looga qabanayo xaaladda bulsho ee ardayda waxaa la socda caawin xaaladda ardayga wax u tari doonta – in kasta oo aan ku jirno xaalad adag.

Wax badan ayaan dhallinyarada u qabanaynaa. Si aysan dhallinyaradu u dareemin in aysan bulshada ka mid ahayn oo aysan muddo dheer shaqala’aan u ahaannin ayaan waxaan samaynaynaa qorshe dhallinyarada kor loogu qaadayo kaas oo ka koobnaan doona waxbarasho, in ay NAV si wanaagsan ula socoto, shaqooyinka xagaaga oo la badiyo iyo in la sii dheereeyo wakhtiga dib loo dhigayo dib u bixinta amaahda waxbarashada.

Waxaan tusaale ahaan kordhinaynaa deeqaha waxbarashada ee wax laga beddeli karo ee sida gaarka ah loogu tala galay dadka dhawaan waxbarashada soo dhammaystay iyo dhallinyarada aan weli helin khibrad shaqo oo badan, iyo weliba kuwa shaqala’aanta ah iyo kuwa shaqadi sida ku meelgaarka ah looga joojiyay.

Waxaan soo jeedinnay caawin loo fidinayo dhallinyarada qaadanaysa tababbarka xirfadda [lærlinger] ama kuwa baranaya maaddo macallinnimo [lærekandidater] ee qarka u saran in shaqada si ku meelgaar ah looga joojiyo ama in ay lumiyaan booska ay wax ka bartaan.

Waxaa kale oo aan xoogga saaraynaa dugsiyada xagaaga. Annagoo bixinayna in ka badan 500 milyan oo karoon ayaan rabnaa in ay degmooyinku ardayda iyo dhallinyarada u fidiyaan goobo ay fasaxa xagaaga kaga qaybqaadan karaan firfircooniyaal maaddo, kuwo bulsho iyo kuwo dhaqan.

Arrintan ayaa sidoo kale fursad u noqon karta ardayda u baahan in ay ka daba tagaan waxbarashadii ay seegeen intii ay dugsiyadu la xirnaayeen tillaabooyinkii looga hortagayay faafidda cudurka.

Waxay degmooyinku wadashaqayn la yeelan karaan naadiyada isboortiga, dugsiyada dhaqanka, ururrada, dugsiyada firforcoonida loo tago [leirskoler] iyo qaar kale si ardayda dhigata dugsiyada hoose/dhexe ay xagaaga u helaan wax ay qabtaan.

Waxaa kale oo ay dawladdu soo jeedinaysaa caawin toos ah oo loogu tala galay is-dhexgalka taas oo dhan 323 milyan oo karoon. Waxaa tusaale ahaan loo isticmaalayaa barashada af norwiijiga, borogaraamka waxbarashada iyo warbixinno ku aaddan kooxaha ajnebiga ah.

Waxaan hadda aad uga hadalnay balaayiin lacag ah iyo taageero dhaqaale oo dad badan aad muhiim ugu ah – sida ardayda dalka oo dhan.

Xaaladdu sida way dhaami doontaa, laakiin bishi koowaad ee sanadka cusub waxaan aragnay in uu dib-u-dhac imaan karo. Ilaa iyo inta xaaladdaan laga gudbayo dawladdu way sii wadi doontaa taageerada dhaqaale ee waxtarka leh.

Laakiin dad sii badanaya ayaa fahmay in aysan arrintu lacag keliya ku saabsanayn. Waxaa meesha ku jira in aan isu xiisnay, in aan u xiisnay in hab laysa siiyo. Waa in aan is gacan qabanno. Farriimo qoraal ah isu dirno, telefoon isu dirno, ama wax uun u qabanno dadka aan jecelnahay.

Przez cały okres pandemii próbowaliśmy chronić dzieci i młodzież przed najdotkliwszymi obostrzeniami. Wiemy, że trudno jest żyć stosując się do restrykcji w życiu społecznym, na kwarantannie i w izolacji. Zwłaszcza, jeśli chodzi tu o twoje dzieciństwo, twoją młodość i twoje życie studenckie.

Mimo, że środki bezpieczeństwa mające trzymać pandemię w szachu dotknęły nas wszystkich, duża część naszej młodzieży ma poczucie, że przez ostatni rok ponieśli dużą stratę. To prawda, ponieśliście.

Dlatego proponujemy pieniądze na pakiet studencki i pakiet działań dla młodzieży Ungdomsløft.

To trudny czas na bycie studentem. Studenci nie tylko musieli przejść na nauczanie zdalne i odczuli brak kontaktu z przyjaciółmi, współstudentami i rodziną. Potracili też prace dorywcze w wyniku wprowadzenia działań zapobiegawczych przeciw rozprzestrzenianiu się koronawirusa.

W pakiecie studenckim między innymi kompensujemy utracone dochody poprzez dodatkową pożyczkę, której 40% stanowi stypendium.

Przeznaczymy 150 milionów koron na tworzenie nowych studenckich miejsc pracy w szkołach policealnych, szkołach wyższych i na uniwersytetach. Te pieniądze są przeznaczone na wynagradzanie studentów za społeczną i merytoryczną opiekę nad innymi studentami.

W połączeniu z działaniami mającymi na celu poprawę wsparcia społecznego dla studentów oferujemy tym samym pakiet, który poprawi studencką codzienność pomimo sytuacji w jakiej się znajdujemy.

Stawiamy na młodych. Aby przeciwdziałać wykluczeniu społecznemu młodych ludzi oraz długotrwałemu bezrobociu stawiamy na osobną reformę młodzieżową, aby zastosować dostosowane działania w obszarze kształcenia, lepszego monitorowania przez NAV, zwiększenia liczby prac wakacyjnych i odroczenia spłat kredytu studenckiego na dłuższy okres.

Będziemy rozszerzać m.in. elastyczne oferty kształcenia szczególnie dostosowane do nowo wykształconych, osób młodych bez dużego doświadczenia zawodowego jak również dla osób bezrobotnych oraz osób wysłanych na urlopy przestojowe.

Proponujemy działania wspierające uczniów na praktykach i czeladników, którzy inaczej ryzykowaliby wysłanie na urlopy przestojowe lub utratę miejsca praktyk.

Stawiamy też na szkoły letnie. Przeznaczamy 500 milionów koron, aby gminy mogły w tegoroczne wakacje zaoferować uczniom i innym młodym ludziom przestrzeń do uczestnictwa w zajęciach merytorycznych, towarzyskich i kulturalnych.

Może to też stworzyć nowe możliwości dla tych uczniów, którzy potrzebują nadrobić zaległości w nauce powstałe w wyniku obowiązywania w szkole zasad zapobiegających rozprzestrzenianiu się zakażeń.

 

Gminy mogą nawiązać współpracę z klubami sportowymi, domami kultury, stowarzyszeniami, zielonymi szkołami i innymi, aby stworzyć uczniom szkół podstawowych ofertę szkół letnich.

Rząd proponuje również przeznaczyć 323 miliony koron na celowe działania integracyjne. Środki mają być między innymi przeznaczone na nauczanie języka norweskiego, programy wdrożeniowe oraz działania informacyjne skierowane do grup imigranckich.

Powiedzieliśmy już dużo o miliardach i wsparciu dla gospodarki, które jest ważne dla bardzo wielu osób, również dla was, studentów i uczniów w całym kraju.

Będzie lepiej, ale pierwszy miesiąc nowego roku pokazał też, że zdarzają się nawroty. Rząd będzie prowadził efektywne działania wspierające gospodarkę, aż do czasu wyjścia z kryzysu.

Coraz więcej osób odczuwa jednak, że nie chodzi tylko o pieniądze. Chodzi o to, że tęsknimy za sobą, brakuje nam uścisków. Wszyscy musimy dbać o siebie nawzajem. Wysłać wiadomość, zadzwonić lub zrobić coś dla tych, na których nam zależy.

طوال الجائحة، حاولنا حماية الأطفال والشباب من أكثر الإجراءات تدخلاً. هذا لأننا نعلم أن العيش مع القيود الاجتماعية، في الحجر والعزل الصحي، هو أمر صعب.  خاصة عندما يتعلق الأمر بطفولتك وشبابك وحياتك الطلابية.

لأنه على الرغم من أن تدابير مكافحة العدوى لإبقاء الجائحة تحت السيطرة قد أثرت علينا جميعًا، فإن العديد من شبابنا يشعرون أنهم فقدوا الكثير في العام الماضي. وهذا مؤکد.

لذلك، نقترح تخصیص أموال لحزمة الطلاب وحملة دعم الریاضة الشبابیة Ungdømsløft.

إنه وقت عصیب أن تكون طالبًا الآن. فالطلاب لم یضطروا فقط إلى الحصول على الكثير من التدريس الرقمي والمعاناة من قلة الاتصال بالأصدقاء وزملائهم الطلاب والعائلة،  بل إنهم  فقدوا أيضًا وظائفهم الإضافية بسبب إجراءات مكافحة العدوى .

في حزمة الطلاب، نقدم تعويضًا عن الدخل المفقود من خلال إعطاء الطلاب قرض إضافي علی أن یکون الجزء الممنوح کمنحة 40 بالمائة من القرض.

سننفق 150 مليون كرونة نرويجية على خلق وظائف جديدة للطلاب في الكليات المهنیة والكليات الجامعیة والجامعات. ستذهب هذه الأموال إلى دفع رواتب للطلاب الذین یقدمون متابعة أكاديمية واجتماعية للطلاب الآخرين.

جنبًا إلى جنب مع تدابير تحسين الدعم الاجتماعي للطلاب، نقدم حزمة من شأنها توفير حياة يومية أفضل للطلاب - على الرغم من الوضع الذي نحن فيه.

نحن نركز بشدة على الشباب.  لمواجهة إقصاء الشباب والبطالة طويلة الأجل، فإننا نستثمر في حملة منفصلة للإنهاض بالشباب لتكييف التدابير داخل إطار التعليم، ولضمان متابعة أفضل من خلال NAV ، والمزيد من الوظائف الصيفية وتوسیع نطاق تأجيل سداد قرض الطالب.

نحن نعمل، من بين أمور أخرى، على زیادة العروض التعليمية المرنة التي يتم تكييفها بشكل خاص للخريجين الجدد والشباب الذين ليس لديهم الكثير من الخبرة العملية، وكذلك للعمال العاطلين عن العمل والمسرحين.

إننا نقترح تدابير للمتدربين والمرشحين للتدریب الذين يتعرضون أو هناك خشیة من أن يتعرضوا لخطر التسريح أو فقدان تدريبهم المهني.

نحن نركز أیضا على المدرسة الصيفية. بتخصیص500  مليون كرونة نرويجية، نهدف إلی أن تكون البلديات قادرة على تقديم وإعطاء المزيد من التلامیذ والشباب ساحة يمكنهم من خلالها المشاركة في الأنشطة الأكاديمية والاجتماعية والثقافية خلال عطلة الصيف لهذا العام.

يمكن أن يوفر هذا أيضًا فرصًا جديدة للتلامیذ الذين يحتاجون إلى تعويض التقدم المدرسي المفقود نتيجة تدابير مكافحة العدوى في المدرسة.

 

يمكن للبلديات الدخول في تعاون مع الأندية الرياضية والمدارس الثقافية والجمعيات والمدارس والمخيمات المدرسیة وغيرها لتوفیر عرض المدرسة الصيفية للتلامیذ في المدارس الابتدائية.  

 

تقترح الحكومة أيضًا إجراءات إدماج هادفة بقيمة 323 مليون كرونة نرويجية.  من بين أمور أخرى، سوف تذهب الأموال إلى تدريس اللغة النرويجية والبرامج التمهيدية وتدابير نشر المعلومات التي تستهدف مجموعات المهاجرين.

لقد تحدثنا الآن كثيرًا عن المليارات وعن الإجراءات المالية التي تهم الكثيرين جدًا - خاصة الطلاب والتلامیذ في جميع أنحاء البلاد.

سوف يتحسن الوضع، لكن الشهر الأول من العام الجديد أظهر أيضًا أنه ستكون هناك نكسات.  ستواصل الحكومة اتخاذ الإجراءات الاقتصادية التي تحدث فرقا، إلی أن نتجاوز هذا الوضع.

لكن المزيد والمزيد من الناس يدركون أن الأمر لا يتعلق بالمال فقط. الأمر یتعلق بحقیقة أننا نفتقد بعضنا البعض ونفتقد معانقة بعضنا البعض. يجب أن يستمر كل منا في الاهتمام بأمر بعضنا البعض. أرسل رسالة نصیة أو أجرِ مكالمة هاتفية أو افعل شيئًا لمن تحب.